Valentine’s Day – Aliya Younas

عالیہ یونس


کہتے ہیں محبت کا عالمی دن منایا جاے گا ۔۔۔۔۔۔ گلابوں کا دن ۔۔۔ وعدوں کا دن ۔۔۔۔قسموں کا دن ۔۔۔۔۔۔۔ جو اپنے بابا کی گڑیا ہے اسے کسی اور کی طرف سے سند1 ملے گی کہ اس سے خوبصورت کوئی نہیں ۔۔۔۔۔ اس کے سنہری بال ۔۔اس کے چمکتے رخساروں کو خراج محبت پیش کیا جائے گا ۔۔۔۔۔۔۔ اس کو پھولوں میں تولا جائے گا ۔۔۔۔۔ ہاں بنتا بھی ہے ۔۔۔۔۔۔ جن کہ گھروں میں یہ ہو کہ بھائی کے کمرے سے ساری رات سر گوشیوں کی آواز آتی رہے ۔۔۔۔۔ باپ ساری رات کیبل پہ چلنے والے گرم پروگرام دیکھتا رہے ۔۔۔۔۔ اور بیٹی ساری رات کروٹیں بدلتی رہے ۔۔۔۔ وہاں بنتا ہے ۔۔۔۔۔ گھر سے نکلو تو سہیلییوں کی واحد مصروفیت یہی ہو ۔۔۔۔۔۔ تو وہاں بنتا ہے ۔۔۔۔ایک ایسی محبت جو پچھلے کئی سال کی محبتوں کو بھلا دے ۔۔۔۔۔ طاقت تو رکھتی ہے ۔۔۔۔۔ چاہے کچھ لمحوں کے لئے ہی سہی ۔۔۔۔۔۔ جب گھر سے وہ نہیں ملتی تو پھر جہاں سے ملتی ہے ۔۔۔۔لے لی جاتی ہے ۔۔۔ چاہے کتنی سستی ہی کیوں نہ ہو ۔۔۔۔۔۔ قصور کسی کا نہیں ۔۔۔کیوں کہ قصور وار ہم سب ہیں ۔۔۔۔۔۔ ہم اپنی جوان نسلوں کو خود مواقع مہیا کرتے ہیں۔۔۔۔۔۔۔ اور وقت آنے پہ ہم سا غیرت مند کوئی نہیں ہوتا ۔۔۔۔۔۔ اپنے بچوں کے ہاتھ میں آگ دیتے ہیں اور جب وہ سب جلا بیٹھتے ہیں تو ان کو پھر اپنے ہاتھوں سے دفنا آتے ہیں ۔۔۔۔ اپنے بچوں کو ان کا حق دیں تا کہ ان کو چوری چھپے کہیں اور سے مانگنا نہ پڑے ۔۔۔۔۔ اپنی گڑیا کو کسی کے ہاتھ میں کھلونا مت بننے دیں ۔۔۔ نہیں تو اس کا سنہری رنگ اڑ جائے گا ۔۔۔۔۔۔ محبت دیں ۔۔۔ تا کہ ہر کوئی انھیں عزت دے ۔۔۔۔۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *