Category: Samay Ka Bandhan

0

سیڑھی سرکار – سمے کا بندھن

ٹائپنگ : سیدہ بشریٰ شاہ پتہ نہیں  میں  سیڑھی سرکار کیسے پہنچا مجھ میں اک اضطراب لہریں لے رہا تھا ایسے لگتا تھا جیسے کوئی سوکھا پتہ جھکڑ  میں ڈول رہا ھو نہیں میں...

0

چٹ کپڑی۔۔۔سمے کا بندھن

چٹ کپڑی دو سال کے بعد میں فرید آباد آیا تھا۔ ائیر پورٹ پر اترتے ہی میں نے محسوس کیا کہ فرید آباد میں بہت تبدیلیاں واقع ہو چکی ہیں۔ ٹیکسی والے نے ایلیٹ...

0

گُرداس۔۔۔۔داس گُرو۔۔۔سمے کا بندھن

گُرداس۔۔۔۔داس گُرو سنگلدیپ کے مہاراج رانی شنکتلہ دیوی کے پس بیٹھے تھے۔ دفعةً انہوں نے سر اٹھایا ۔بولے ”مہارانی کچھ دنوں سے ہم دیکھ رہے ہیں کہ تم ہمارے پاس ہوتےہوےبھی ہمارے پاس نہیں...

0

دیوی۔۔ سمے کا بندھن

دیوی اونہوں! رانگ نمبر بہت آزما دیکھے۔ بے کار۔ سب ایک ہی بولی بولتے ہیں۔ آئی لوو یو ڈارلنگ۔۔۔ ہنہہ۔ نہ دیکھا نہ جانا اور آئی لوو یو ڈارلنگ۔ بھلا کوئی بات ہوئی۔۔۔ سب...

0

دو مونہی–سمے کا بندھن

سوچتی ہوں کہ میں تیاگ کلینک میں گئی ہی کیوں ؟ کیا فائدہ ہوا بھلا؟  اپنی بیماری دور کرانے کے لئے گئی تھی، ساری مخلوق کو بیمار کر کے آ گئی۔ وہی بات ہوئی...

0

مانا نمانہ—سمے کا بندھن

مانا نمانہ نمانہ کی والدہ خانم پر گھبراہٹ طاری تھی کہ کس طرح بیٹی سے عشتے کی بات کرے۔ ڈرتی تھی کہیں انکار نہ کر دے۔ وہ اپنی بیٹی کے ادلتے بدلتے موڈ سے...

0

کس لیے؟ کیا اس لیے؟۔۔۔سمے کا بندھن

کس لیے؟ کیا اس لیے؟ ہائیں پھر۔۔پھر وہی علی کاٹج۔۔یہ میں ادھر کیسے چلا آیا۔۔؟ یہ کیا ھو رہا ھے؟ اسلام آباد میں گھومتے پھرتے ہر دوسرے چوتھے دن انجانے میں میں خود کو...

0

اپمان۔ اپ مین اپ – سمے کا بندھن

اپمان۔ اپ مین اپ ۔ ممتاز مفتی دُور اُفق کے پاس غربُ الہند کے حسین جزیروں کے جھرمٹ میں جھول جزیرہ اپنی آتش فشاں خصلت کی وجہ سے جھول رہا تھا۔ جزیرے کے واحد...

0

ایک ہاتھ کی تالی ۔ سمے کا بندھن

ایک ہاتھ کی تالی چلتے چلتے میں رُک گیاہائیں یہ کیا ؟ میرے سامنے چھوٹی چار دیواری کے درمیان ایک درخت کھڑا تحا جس کی شاخیں ایک جانب کیکر کی تھیں اور دوسری جانب...